مدینہ منورہ: مسجد نبویؐ کے صحن میں خاتون کے ہاں بچے کی پیدائش

 



مدینہ منورہ کی مسجد نبویؐ میں ایک کو درد زہ کی شکایت ہوئی اور اس نے ایک بچے کو جنم دیا۔ مسجد میں فرائض انجام دے رہے سعودی ہلال احمر کے رضاکاروں کے لئے یہ ایک نادر تجربہ تھا


مدینہ منورہ: مدینہ منورہ میں مسجد نبویؐ میں فرائض انجام دے رہے سعودی ہلال احمر کے رضاکاروں کو اس وقت نادر تجربہ ہوا جب جب مسجد کے صحن میں ایک خاتون نمازی کو درد کی تکلیف ہوئی اور اس نے ایک بچے کو جنم دیا۔ سعودی ہلال احمر اتھارٹی کی شاخ کے ڈائریکٹر جنرل احمد بن علی الزہرانی نے بتایا کیا کہ رضاکار ٹیموں اور حرم ایمبولینس سنٹر نے ماں کی نازک حالت کے پیش نظر مسجد میں ہی بچے کی پیدائش کا انتظام کیا۔

طبی ٹیموں کے پہنچنے پر معلوم ہوا کہ مسجد نبویؐ کے صحن میں خاتون درد زہ میں مبتلا ہے۔ معائنہ کرنے پر معلوم ہوا کہ جنین کا سر باہر نکل آیا ہے اور ولادت کی حالت شروع ہو چکی تھی۔ فوری طور پر ٹیموں نے ایسے معاملات کے لیے پروٹوکول کے مطابق مداخلت کی اور زچگی کا عمل شروع کیا۔ ایک ہیلتھ پریکٹیشنر جو موقع پر موجود تھا، کا تعاون حاصل کیا گیا اور بچے کی پیدائش کامیابی سے مکمل ہوئی۔

الزہرانی نے مزید بتایا کہ ماں اور نومولود کے چیک اپ کے بعد دونوں کو باب جبریل ہیلتھ سنٹر منتقل کر دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا یہ معاملہ ان کیسز میں شامل تھا جن میں انتہائی طبی کوششوں کی ضرورت ہوتی ہے۔ ایسے کیسز کو کامیابی سے نمٹانے کے لئے خصوصی میڈیکل مہارت درکار ہوتی ہے۔ تربیتی کورسز میں اس طرح کے کیسز میں تمام ہنگامی اور خصوصی تربیتی طریقے بھی سکھائے جاتے ہیں۔

انہوں نے واضح کیا کہ ایسی صورتحال میں فوری طور پر ایمبولینس بلانے کی کال کی اہمیت مزید واضح ہو جاتی ہے۔ ایمرجنسی کی صورت میں 997 پر کال کر لی جائے، ’ہیلپ می‘ ایپ ایمبولنس بلالی جائے یا ’توکلنا‘ ایپ سے کال کر دی جائے تو کافی وقت اور محنت کی بچت ہو سکتی ہے۔



Post a Comment

Previous Post Next Post